مقبوضہ کشمیر:بھارتی فوجیوں نے تین کشمیری تاجروں اور ایک ڈاکٹر کو بہیمانہ طورپر قتل کردیا

غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی کے دوران تین کشمیری تاجروں اور ایک ڈاکٹر کو سرینگر میں شہید کردیا ہے ۔
کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق فوجیوں نے ایک دکاندار الطاف احمد بٹ،ایک پراپرٹی ڈیلر اور ایک ٹی سٹال کے مالک سمیت تین تاجروں اور ایک ڈاکٹر مدثر کو کو سرینگر کے علاقے حیدرپورہ میں تلاشی اور محاصرے کی کارروائی کے دوران شہید کیا۔الطاف کے اہلخانہ کاکہنا ہے کہ اسے بھارتی فوجیوں نے بلااشتعال فائرنگ کر کے بہیمانہ طورپر شہید کیا۔ اہلخانہ نے الطاف کی میت کی واپسی کیلئے برزلہ میں احتجاجی مظاہرہ کیا۔
مظاہرین کا کہناتھا کہ فوجی اہلکار بھارتی وزیر داخلہ امیت شاہ کے حالیہ مقبوضہ علاقے کے دورے کے دوران تیار کی گئی پالیسی کے تحت بے گناہ کشمیریوں کا قتل عام جاری رکھے ہوئے ہیں ۔ پالیسی کے تحت فوجیوں کو مقبوضہ علاقے میں بھارتی فوجیوں پر کسی بھی حملے کی صورت میں بے گناہ شہریوں کو نشانہ بنانے کی ہدایت کی گئی ہے ۔