آزادکشمیرتحریک آزادی کشمیرکا بیس کیمپ ہے، وزیراعظم آزادکشمیر

وزیراعظم آزاد حکومت ریاست جموں وکشمیر راجہ محمد فاروق حیدر خان نے کہا ہے کہ آزاد کشمیر حکومت کے قیام کا بنیادی مقصد ہی تحریک آزادی کے لیے بیس کیمپ کا کردار ادا کرنا تھا۔ ریاست جموں وکشمیر کے عوام نے 1944 میں اپنا مستقبل پاکستان اور قائد اعظم محمد علی جناح سے وابستہ کیا۔ مسئلہ کشمیر کو حقیقی تناظر میں عالمی فورموں پر اجاگر کرنے کی ضرورت ہے۔ جموں وکشمیر لبریشن سیل کو مستقل بنیادوں پر پائیدار لائحہ عمل طے کرنا چاہیے۔ آزاد کشمیر میں اس محکمہ کی ضرورت اور افادیت سب سے زیادہ ہے۔ ان خیالات کا اظہار وزیراعظم آزاد حکومت ریاست جموں وکشمیر نے جمعرات کو جموں وکشمیر لبریشن سیل بورڈ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں پرنسپل سیکرٹری برائے جناب وزیراعظم، سیکرٹری سروسز اینڈ جنرل ایڈمنسٹریشن، سیکرٹری مالیات، سیکرٹری جموں وکشمیر لبریشن سیل اور ڈائریکٹر انتطامیہ لبریشن سیل نے شرکت کی۔ اجلاس میں پالیسی ریسرچ فورم کی تنظیم نو اور اس کا نام ” کشمیر پالیسی ریسرچ انسٹیٹیوٹ ” میں مبدل کرنے کی منظوری دی گئی۔ اس تھینک ٹینک کے ایڈوائزری بورڈ کے ممبران کے لیے سابق سفیر عبدالباسط خان، عارف کمال، اشتیاق اندرابی، مسعود خان، جنرل آغا فاروق ، ڈاکٹر مشتاق احمد، ڈاکٹر رابعہ اختر، ڈاکٹر عائشہ سہیل ، سیکرٹری سروسز اینڈ جنرل ایڈمنسٹریشن، سیکرٹری مالیات، سیکرٹری ہائیر ایجوکیشن ، سیکرٹری جموں وکشمیر لبریشن سیل اور ڈین فیکلٹی آف ارٹس یونیورسٹی اف آزاد جموں وکشمیر کی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں جموں وکشمیر لبریشن سیل اور کشمیر کلچرل اکیڈمی کی ری آرگنائزیشن کے لیے ایڈیشنل چیف سیکرٹری (جنرل) کی سربراہی میں کمیٹی کی منظوری دی۔ اجلاس میں جناب وزیراعظم نے ہدایت کی کہ 23 مارچ یوم پاکستان اور 13 جولائی یوم شہداءکشمیر کے موقع پر ازادکشمیر بھر میں تقریبات منعقد کی جائیں۔ مقبوضہ جموں وکشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے حوالہ سے کانفرنسوں اور ویبنار کا انعقاد کیا جائے۔ لبریشن سیل کو ریسرچ اور لٹریچر پر کام کرنے کی ضرورت ہے۔ جموں میں مسلمانوں کے قتل عام پر ایک کتاب تیار کی جانی چاہئے۔ یونیورسٹیوں اور تعلیمی ادرہ جات میں طلبا کو مسئلہ کشمیر کے حوالہ سے آگاہی دی جائے۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ جموں وکشمیر کی آزادی کی جدوجہد انشاءاللہ کامیاب ہو گی۔ ہندوستان کی بربریت کو دنیا کے سامنے لایا جانا ضروری ہے۔ آزاد کشمیر حکومت ادارہ کی تمام ضروریات کو پورا کرے